تقریباََ 4000 کارکنان حج کے دوران خانہ کعبہ کی روزانہ 10 بار صفائی کریں گے۔

In اسلام
June 17, 2023
تقریباََ 4000 کارکنان حج کے دوران خانہ کعبہ کی روزانہ 10 بار صفائی کریں گے۔

تقریباََ 4000 کارکنان حج کے دوران خانہ کعبہ کی روزانہ 10 بار صفائی کریں گے۔

مسجد نبوی اور مسجد نبوی کی جنرل پریذیڈنسی آئندہ حج سیزن کے دوران عازمین کے استقبال کے لیے پوری طرح تیار ہے۔

مسجد نبوی کی جنرل پریذیڈنسی نے مرد اور خواتین سمیت 4,000 کارکنوں کی ایک بڑی ٹیم کو اکٹھا کیا ہے، جو دن میں کم از کم 10 بار گرینڈ مسجد کی صفائی کرے گی۔ 400 سے زیادہ نگرانوں کی مدد سے، وہ مسجد کو ہر ایک کے لیے صاف ستھرا رکھنے کے لیے پرعزم ہیں۔

صفائی کے علاوہ، کارکن زمزم کے پانی کی 7000 بوتلیں تقسیم کریں گے، اور پوری مسجد میں حجاج کی مدد کے لیے 800 اضافی کارکن دستیاب ہوں گے۔ لوگوں کے لیے پانی تک رسائی کو آسان بنانے کے لیے، ایوانِ صدر مسجد کے آس پاس مناسب جگہوں پر زمزم کے پانی کے 4,500 کنٹینرز رکھے گا۔

چیزوں کو آسانی سے چلانے کے لیے گاڑیوں کا ایک بیڑا ہوگا، جس میں ریگولر اور الیکٹرک گاڑیاں شامل ہیں، جن کا انتظام ایک خصوصی ایپ کے ذریعے کیا جائے گا۔ اس سے کاموں کو منظم کرنے اور اس بات کو یقینی بنانے میں مدد ملے گی کہ گاڑیاں اور ان کے آپریٹرز مؤثر طریقے سے کام کر رہے ہیں۔ لوگوں کی رہنمائی اور نمازیوں کے بہاؤ کو منظم کرنے کے لیے عملہ داخلی راستوں پر موجود رہے گا۔

جنرل پریذیڈنسی صفائی برقرار رکھنے کے لیے جدید ٹیکنالوجی کا استعمال کر رہی ہے۔ اس میں خصوصی روبوٹ ہیں جو انسانی مداخلت کے بغیر مسجد کو جراثیم سے پاک کرسکتے ہیں۔ ان روبوٹس کو مسجد کے ہر کونے تک پہنچنے کا پروگرام بنایا گیا ہے۔ ایسے آلات بھی استعمال کیے جائیں گے جو ایک ہی وقت میں ہوا اور سطح دونوں کو جراثیم سے پاک کریں گے۔ مشکل سے پہنچنے والے علاقوں میں، فوگ جراثیم کش استعمال کیے جائیں گے۔ اس کے علاوہ پوری مسجد میں 600 ہینڈز فری ہینڈ سینیٹائزر رکھے جائیں گے۔

ایک خصوصی ٹیم مسجد، اس کے صحنوں اور اس کے بیت الخلاء کو صاف کرے گی، جس میں 70,000 لیٹر سے زائد جراثیم کش استعمال کیے جائیں گے تاکہ بین الاقوامی صحت کے معیارات کے مطابق محفوظ اور صحت مند ماحول کو یقینی بنایا جا سکے۔

/ Published posts: 3261

موجودہ دور میں انگریزی زبان کو بہت پذیرآئی حاصل ہوئی ہے۔ دنیا میں ۹۰ فیصد ویب سائٹس پر انگریزی زبان میں معلومات فراہم کی جاتی ہیں۔ لیکن پاکستان میں ۸۰سے ۹۰ فیصد لوگ ایسے ہیں. جن کو انگریزی زبان نہ تو پڑھنی آتی ہے۔ اور نہ ہی وہ انگریزی زبان کو سمجھ سکتے ہیں۔ لہذا، زیادہ تر صارفین ایسی ویب سائیٹس سے علم حاصل کرنے سے قاصر ہیں۔ اس لیے ہم نے اپنے زائرین کی آسانی کے لیے انگریزی اور اردو دونوں میں مواد شائع کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ جس سے ہمارےپاکستانی لوگ نہ صرف خبریں بآسانی پڑھ سکیں گے۔ بلکہ یہاں پر موجود مختلف کھیلوں اور تفریحوں پر مبنی مواد سے بھی فائدہ اٹھا سکیں گے۔ نیوز فلیکس پر بہترین رائٹرز اپنی سروسز فراہم کرتے ہیں۔ جن کا مقصد اپنے ملک کے نوجوانوں کی صلاحیتوں اور مہارتوں میں اضافہ کرنا ہے۔

Twitter
Facebook
Youtube
Linkedin
Instagram