سورۃ العلق کے فوائد

In اسلام
February 13, 2023
سورۃ العلق کے فوائد

سورۃ العلق کے فوائد

قرآن مجید کے 30ویں جزء میں سورۃ العلق کا مطلب ہے چمٹا ہوا ماس یا مادہ، جسے اقرا (پڑھنا) بھی کہا جاتا ہے۔ قرآن مجید کی 96ویں سورت سورۃ العلق عرف اقراء ہے۔ اللہ تعالیٰ نے اسے مکہ میں غار حرا میں نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم پر نازل کیا۔ خدا کا فرشتہ جبرائیل علیہ السلام نبی صلی اللہ علیہ وسلم کو قرآن کی تلاوت کا حکم دیتا ہے۔ سورہ علق مکی سورہ ہے اور اس میں انیس آیات ہیں۔

سورۃ العلق کی تلاوت حوادث سے حفاظت کے ساتھ ساتھ انسان کی یادداشت میں بھی اضافہ کرتی ہے، شہادت کا ثواب حاصل کرتی ہے اور حادثات سے محفوظ رکھتی ہے۔

سورۃ العلق کے فوائد

سورۃ العلق کے فوائد درج ذیل ہیں

ایک شہید کا ثواب حاصل کریں۔

جو شخص سورہ علق کی تلاوت کرے گا وہ قیامت کے دن شہداء میں سے ہو گا جیسا کہ اس حدیث میں مذکور ہے۔

امام جعفر صادق علیہ السلام نے فرمایا

جو شخص سورۃ العلق کو دن میں یا رات میں پڑھتا ہے اور پھر اس کا انتقال ہو جاتا ہے تو وہ ان شہداء میں شمار ہوتا ہے جنہوں نے رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی طرف سے جہاد کیا تھا۔ (تفسیر برہان)

کسی بھی حادثے سے حفاظت

کسی بھی سفر سے پہلے سورۃ العلق کی تلاوت کریں کیونکہ یہ کسی بھی حادثے سے حفاظت فراہم کرتی ہے۔ جیسا کہ سید مصطفیٰ موسوی لکھتے ہیں

سفر کے دوران سورہ العلق کی تلاوت کرنا حادثات سے بچاؤ کے لیے احتیاط کا کام کرتا ہے۔ اسے خزانے پر پڑھنا اس کی حفاظت کو یقینی بناتا ہے۔ (فوائد قرآن)

حافظہ اور ذہانت کے لیے سورہ کی تلاوت کریں۔

ذہانت کے لیے سورۃ العلق کی تلاوت کریں۔ جیسا کہ علامہ عالم فقری لکھتے ہیں

(جو کوئی روزانہ سورہ العلق کی تلاوت کرے گا اسے علم، ذہانت اور حافظہ حاصل ہو جائے گا (عمل القرآن ص429-431

ایک طالب علم کے لیے وظیفہ

سورہ علق امتحان کے دن طالب علم کے لیے بہترین وظیفہ یا دعا ہے۔

طالب علم کو 27 دن (امتحان سے پہلے) اور امتحان کے دن فجر کے بعد 70 مرتبہ سورۃ العلق پڑھنی چاہیے۔ (عامل قرآنی ص 429-431)

 

اگر والدین یہ چاہتے ہیں کہ ان کی اولاد امتحانات میں کامیابی حاصل کرے تو وہ عید کے بعد روزانہ 100 مرتبہ سورہ العلق پڑھ کر اللہ سے دعا کریں۔ (عامل قرآنی ص 429-431)

طاعون سے حفاظت کو محفوظ رکھتا ہے۔

سورہ علق چوری سے حفاظت فراہم کرتی ہے۔ جیسا کہ نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا

‘اگر سورہ علق کو کسی گودام یا ذخیرہ میں پڑھا جائے تو اللہ تعالیٰ اسے خراب ہونے یا چوری ہونے سے روکے گا یہاں تک کہ مالک اسے نکال لے۔’ ابید

سمندر کے ذریعے محفوظ سفر کرنا

سورہ علق سمندری سفر کے دوران حفاظت فراہم کرتی ہے۔ جیسا کہ پیغمبر اسلام نے فرمایا

‘جو شخص سمندر کے سفر پر نکلے اور سورہ علق کی تلاوت کرے تو وہ ڈوبنے سے محفوظ رہے گا۔’ تفسیر البرہان، جلد 1۔ 5، ص۔ 695.

سورۃ العلق کے حقائق

غار حرا میں مکہ میں قیام کے دوران اللہ تعالیٰ نے قرآن مجید کی پانچ آیات حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم پر نازل کیں۔ یہ سورت خدا کے انسان کے خالق ہونے کے بارے میں بتاتی ہے، ایک ایسا شخص جو اس کے معاملات کو کنٹرول کرتا ہے اور اسے وہ چیزیں سکھاتا ہے جو وہ نہیں جانتا۔

الٰہی وحی کے ذریعہ، خدا نبی کو قرآن کی تلاوت کرنے کی ہدایت کرتا ہے اور اسے یقین دلاتا ہے کہ وہ فکر نہ کریں۔ سورہ علق میں ہر اس شخص کے لیے سخت عذاب کی دھمکی دی گئی ہے جو نبی صلی اللہ علیہ وسلم کو نماز پڑھنے سے روکے گا۔

سورۃ العلق ترجمہ

اپنے رب کے نام سے پڑھو جس نے پیدا کیا۔
انسان کو معلق مادہ سے پیدا کیا۔
پڑھیں! اور تمہارا رب بڑا کریم ہے
قلم سے کس نے سکھایا؟
انسان کو وہ سکھایا جو وہ نہیں جانتا تھا۔
نہیں! [لیکن] بے شک انسان حد سے گزرتا ہے۔
کیونکہ وہ خود کو خود کفیل سمجھتا ہے۔
بے شک تیرے رب کی طرف لوٹ کر جانا ہے۔
کیا تم نے منع کرنے والے کو دیکھا ہے؟
بندہ جب نماز پڑھتا ہے؟
کیا تم نے دیکھا کہ وہ ہدایت پر ہے؟
یا راستبازی کی ترغیب دیتا ہے؟
کیا تم نے دیکھا اگر وہ جھٹلائے اور منہ پھیر لے
کیا وہ نہیں جانتا کہ اللہ دیکھ رہا ہے؟
نہیں! اگر وہ باز نہ آیا تو ہم ضرور اسے پیشانی سے گھسیٹیں گے۔
ایک جھوٹا، گناہ کرنے والی پیشانی۔
پھر وہ اپنے ساتھیوں کو بلائے۔
ہم جہنم کے فرشتوں کو بلائیں گے۔
نہیں! اس کی بات نہ مانو۔ لیکن سجدہ کرو اور قرب حاصل کرو۔

سورہ علق مشتمل ہے۔

سورہ علق میں درج ذیل موضوعات کا ذکر ہے

نمبر1: معلق ماس سے انسان کی تخلیق
نمبر2: خدا قلم کے ذریعے انسان کو سکھاتا ہے۔
نمبر3: خدا کے سامنے انسان کی جہالت نے اسے سکھایا
نمبر4: انسان کی خدا کے خلاف بغاوت اور یہ یقین کہ وہ غیر ضروری ہے۔
نمبر5: انسان کا آخرت اور آخرت میں خدا کی طرف لوٹنا

/ Published posts: 3238

موجودہ دور میں انگریزی زبان کو بہت پذیرآئی حاصل ہوئی ہے۔ دنیا میں ۹۰ فیصد ویب سائٹس پر انگریزی زبان میں معلومات فراہم کی جاتی ہیں۔ لیکن پاکستان میں ۸۰سے ۹۰ فیصد لوگ ایسے ہیں. جن کو انگریزی زبان نہ تو پڑھنی آتی ہے۔ اور نہ ہی وہ انگریزی زبان کو سمجھ سکتے ہیں۔ لہذا، زیادہ تر صارفین ایسی ویب سائیٹس سے علم حاصل کرنے سے قاصر ہیں۔ اس لیے ہم نے اپنے زائرین کی آسانی کے لیے انگریزی اور اردو دونوں میں مواد شائع کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ جس سے ہمارےپاکستانی لوگ نہ صرف خبریں بآسانی پڑھ سکیں گے۔ بلکہ یہاں پر موجود مختلف کھیلوں اور تفریحوں پر مبنی مواد سے بھی فائدہ اٹھا سکیں گے۔ نیوز فلیکس پر بہترین رائٹرز اپنی سروسز فراہم کرتے ہیں۔ جن کا مقصد اپنے ملک کے نوجوانوں کی صلاحیتوں اور مہارتوں میں اضافہ کرنا ہے۔

Twitter
Facebook
Youtube
Linkedin
Instagram