گوگل اور اینڈرائیڈ سسٹم نے ہواوے کے ساتھ تعلقات کو منقطع کرنا شروع کر دیا۔

In بریکنگ نیوز
November 09, 2022
گوگل اور اینڈرائیڈ سسٹم نے ہواوے کے ساتھ تعلقات کو منقطع کرنا شروع کر دیا۔

صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے چینی کمپنی ہواوے کو سائن اپ کرنے کے بعد گوگل نے ہواوے کے ساتھ کاروباری مسائل کو بھی معطل کردیا۔ بتایا گیا ہے کہ ونڈ استعمال کرنے والے صارفین اس وقت اینڈرائیڈ ایپس اور گوگل پلے سروسز استعمال کر سکتے ہیں تاہم گوگل کی جانب سے اگلا ورژن لانچ کرنے کے بعد یہ رواں سال دستیاب ہونے کا امکان ہے۔

تاہم ہواوے کے صارفین اس نئے ورژن کو اینڈرائیڈ آپریٹنگ سسٹم اوپن سورس لائسنس کے ذریعے استعمال کریں گے۔ خیال کیا جا رہا ہے کہ یہ پابندی ایسے وقت میں لگائی گئی ہے جب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے چینی کمپنی ہواوے کو ان کمپنیوں کی فہرست میں شامل کر لیا ہے جو امریکی فرموں کے لائسنس کے بغیر تجارت نہیں کر سکیں گی۔

دوسری جانب جب ہواوے کمپنی کی ڈیوائسز پر گوگل اور اینڈرائیڈ سسٹم کی رسائی معطل ہے کیونکہ ہواوے کمپنی نے اپنے آپریٹنگ سسٹم کی تصدیق کردی ہے۔

ہواوے کے موبائل چیف رچرڈ یونگ ڈونگ نے کہا کہ اگر ہواوے پر گوگل اور اینڈرائیڈ سروسز کو مستقل طور پر معطل کر دیا جاتا ہے تو ان کی کمپنی نے اس صورتحال سے نمٹنے کے لیے اپنا آپریٹنگ سسٹم پہلے ہی تیار کر لیا ہے۔ کمپنی کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ ضرورت پڑنے پر موبائل فون اور کمپیوٹر کے لیے یہ سسٹم متعارف کرایا جائے گا۔ گوگل کی پابندی کے بعد خیال کیا جا رہا تھا کہ گوگل کے اس اقدام کے بعد دنیا بھر میں بڑی تعداد میں موبائل فون دستیاب ہوں گے۔

ہواوے ٹیکنالوجی پر گوگل اور اینڈرائیڈ سروسز کیوں معطل ہیں؟

چینی کمپنی ہواوے ٹیکنالوجیز پر گوگل سروسز معطل گوگل نے یہ قدم اس وقت اٹھایا تھا جب چند روز قبل امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے بلیک لسٹ کیا تھا۔ ہواوے نئے وائی فائی نیٹ ورکس تک موبائل انٹرنیٹ تک رسائی کا سب سے بڑا کارخانہ دار ہے، اور بہت سے مغربی ممالک اور ان کی کمپنیاں اس کے ٹولز استعمال کرتی ہیں۔

ہواوے کے صارفین اب اینڈرائیڈ ایپس اور گوگل پلے سروسز استعمال کر سکیں گے لیکن اس سال گوگل کے اگلے ورژن کے لانچ ہونے کے بعد ان کے ڈیوائسز پر دستیاب ہونے کا امکان نہیں ہے۔ اس کے بعد ہواوے کے صارفین اس نئے ورژن کو اینڈرائیڈ آپریٹنگ سسٹم اوپن سورس لائسنس کے ذریعے استعمال کریں گے۔

ہواوے کمپنی نے اپنا آپریٹنگ سسٹم ہونے کی تصدیق کر دی، ہواوے کے موبائل چیف رچرڈ یونگ ڈونگ ڈونگ نے کہا کہ اگر ہواوے پر گوگل اور اینڈرائیڈ سروسز مستقل طور پر معطل ہو جاتی ہیں تو ان کی کمپنی نے ایسی صورتحال سے نمٹنے کے لیے پہلے ہی آپریٹنگ سسٹم تیار کر لیا ہے۔ کمپنی کا کہنا ہے کہ ضرورت پڑنے پر یہ نظام موبائل فون اور کمپیوٹر کے لیے متعارف کرایا جائے گا۔ یہ بھی کہا جا رہا ہے کہ اس اقدام کے بعد کمپنی دنیا بھر میں اپنے کاروبار پر ہر قسم کے اثرات کے لیے تیار ہے۔

خیال کیا جا رہا تھا کہ گزشتہ ہفتے صدر ٹرمپ نے ایک ایگزیکٹو آرڈر پر دستخط کیے تھے، جس کے تحت امریکی کمپنیاں غیر ملکی کمپنیوں کے تیار کردہ ٹیلی کام آلات کا استعمال بند کر دیں گی، جسے امریکی حکومت قومی سلامتی کے لیے خطرہ سمجھتی ہے۔ ہیون کی انتظامیہ ماضی میں کئی بار کہہ چکی ہے کہ وہ امریکہ کے لیے خطرہ نہیں ہے اور امریکی کمپنیوں کی جاسوسی کے الزامات بے مثال ہیں۔

ہواوے کے صارفین کے لیے یہ خبر بہت مایوس کن ہوگی کیونکہ ہواوے اب ان کے لیے اینڈرائیڈ سسٹم نہیں رہا! اس کے علاوہ انہیں اپنےہواوے موبائلز کے ساتھ گوگل تک رسائی حاصل کرنے میں شاید ہی بہت سے مسائل درپیش ہوں گے۔

/ Published posts: 3238

موجودہ دور میں انگریزی زبان کو بہت پذیرآئی حاصل ہوئی ہے۔ دنیا میں ۹۰ فیصد ویب سائٹس پر انگریزی زبان میں معلومات فراہم کی جاتی ہیں۔ لیکن پاکستان میں ۸۰سے ۹۰ فیصد لوگ ایسے ہیں. جن کو انگریزی زبان نہ تو پڑھنی آتی ہے۔ اور نہ ہی وہ انگریزی زبان کو سمجھ سکتے ہیں۔ لہذا، زیادہ تر صارفین ایسی ویب سائیٹس سے علم حاصل کرنے سے قاصر ہیں۔ اس لیے ہم نے اپنے زائرین کی آسانی کے لیے انگریزی اور اردو دونوں میں مواد شائع کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ جس سے ہمارےپاکستانی لوگ نہ صرف خبریں بآسانی پڑھ سکیں گے۔ بلکہ یہاں پر موجود مختلف کھیلوں اور تفریحوں پر مبنی مواد سے بھی فائدہ اٹھا سکیں گے۔ نیوز فلیکس پر بہترین رائٹرز اپنی سروسز فراہم کرتے ہیں۔ جن کا مقصد اپنے ملک کے نوجوانوں کی صلاحیتوں اور مہارتوں میں اضافہ کرنا ہے۔

Twitter
Facebook
Youtube
Linkedin
Instagram